Weather (state,county)

Abhi Kia Kahen Abhi Kia Sunen


ابھی
کیا
کہیں,ابھی کیا
سنیں
کہ سر ِ فصیل ِ سکوت ِ جاں
کف ِ روز و شب پہ شرر نما
وہ جو حرف حرف چراغ تھا
اسے کس ہوا نے بجھا دیا ؟
کبھی لب ہلیں گے تو
پوچھنا!
سر ِ شہر ِ عہد ِ وصال ِ دل
وہ جو نکہتوں کا ہجوم تھا
اسے دست ِ موج ِ فراق نے
تہ ِ خاک کب سے ملا دیا ؟
کبھی گل کھلیں گے تو
پوچھنا!
ابھی کیا کہیں,ابھی کیا
سنیں
یونہی خواہشوں کے فشار
میں
کبھی بے سبب ۔۔۔ کبھی بے
خلل
کہاں، کون کس سے بچھڑ
گیا
کسے ، کس نے کیسے بھلا
دیا
کبھی پھر ملیں گے تو
پوچھنا۔۔!
abhi kia kahen abhi kia sunen
ke sr e faseel e sakoot e jan
kaf e roz o shab ye sharar numa
wo jo harf harf chiragh tha
usey kis hawa ne bujha diya
kabhi lab hilain gey to puchana
sr e shehr e ehd e wisal e dil
wo jo nik'haton ka hajoom tha
usey dast e moj e faraq ne
tah e khak kab se mila diya
kabhi gul khilain gey to puchana
abhi kia kahain abhi kia sunain
yunhi khuwahishon ke fishar me
kabhi be sabab kabhi be khalal
kahan kon kis se bichar gaya
kabhi phir milen gey to puchana...!!!!
Powered by Blogger.