Weather (state,county)

Chalo Raahen Badal Len


--------چلو راہیں بدل لیں-------- !!

تعلق خور لمحے سے ذرا پہلے
چلو راہیں بدل لیں
تیری سانسوں کی شہنائی،
صدائے ماتمیں بن کر سماعت سوز بنتی جارہی ہے ۔
تمہاری شوخ چشمی اب مجھے کھَلنے لگی ہے
ہماری گفتگو تکرار بنتی جا رہی ہے
تمہارا انتظار اب الجھنوں کا پیش خیمہ ہے۔
ہماری خواہش دیدار مٹتی جارہی ہے
ہم ایک دوجے کونہ ملنے کے عادی ہوتے جاتے ہیں۔
نہ ملنے کے بہانے ڈھونڈ کر ہم
نظر انداز کر نے کا گناہ کرنے لگے ہیں
تعلق برطرف رسوائیاں ہیں
تری صحبت میں بھی تنہائیاں ہیں
تعلق دل گزیدہ ہو رہا ہے۔
چلو راہیں بدل لیں ۔
بھرم اک دوسرے کا
دھجیاں ٹوٹے تعلق کی
دبی سی آس لے کر
ذرا پہلے ،
تعلق خور لمحے سے
ذرا پہلے !!
چلو راہیں بدل لیں
....................................
Tahalluq khor lamhe se Zara pehle
chalo raahen badal len
teri sanson ki shehnai
sada-e-matmee Ban ker sama'at soz banti ja rhi hai
tumhari shokh chismi ab mujhe khulne lagi hai
hamari guftugu takraar banti ja rahi hai
tumhara intezar ab uljhano ka pish khaima hai
hamari khawahish e deedar ab mit'ti ja rahi ha
hum aik dooje ko na milne ke aadi hoty jate hain
na milne k bahane dhoondh ker hum
nazar andaaz ka gunah krne lage hain
tahalluq bartaraf ruswayan hain
teri sohbat mein bhi tanhayan hain
tahalluq dil gzeeda ho raha hai
chalo raahen badal len
bharam aik doosre ka
dhajian toote tahalluq ki
dabi c aas le kar
zara pehle
chalo raahen badal len
Powered by Blogger.