Weather (state,county)

Kisi Nazar Ko Tera Intezar Aaj Bhi Hai


کسی نظر کو تیرا انتظار آج بھی ہے
کہاں ہو تم کہ یہ دل بےقرار آج بھی ہے
وہ وادیاں،وہ فضائیں کہ ہم ملے تھے جہاں
میری وفا کا وہیں پر مزار آج بھی ہے
نہ جانے دیکھ کہ کیوں اُن کو یہ ہوا احساس
کہ میرے دل پہ اُنہیں اختیار آج بھی ہے
وہ پیار جس کے لیے ہم نے چھوڑ دی دنیا
وفا کی راہ پہ گھائل وہ پیار آج بھی ہے
یقین نہیں ہے مگر آج بھی یہ لگتا ہے
میری تلاش میں شاید بہار آج بھی ہے
نہ پوچھ کتنے محبت کے زخم کھائے ہیں
کہ جن کو سوچ کے دل سوگوار آج بھی ہے
Powered by Blogger.