Weather (state,county)

Marhale Shauq Ke Dushwar Hua Kerty Hain


مرحلے شوق کے دُشوار ہُوا کرتے ہیں
سائے بھی راہ کی دیوار ہُوا کرتے ہیں


وہ جو سچ بولتے رہنے کی قسم کھاتے ہیں
وہ عدالت میں گُنہگار ہُوا کرتے ہیں


صرف ہاتھوں کو نہ دیکھو کبھی آنکھیں بھی پڑھو
کچھ سوالی بڑے خود دار ہُوا کرتے ہیں


وہ جو پتھر یونہی رستے میں پڑے رہتے ہیں
اُن کے سینے میں بھی شہکار ہُوا کرتے ہیں


صبح کی پہلی کرن جن کو رُلا دیتی ہے
وہ ستاروں کے عزا دار ہُوا کرتے ہیں


جن کی آنکھوں میں سدا پیاس کے صحرا چمکیں
در حقیقت وہی فنکار ہُوا کرتے ہیں


شرم آتی ہے کہ دُشمن کِسے سمجھیں محسن
دُشمنی کے بھی تو معیار ہُوا کرتے ہیں

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
Marhale Shauq Ke Dushwar Hua Karte Hain
Saaye Bhi Raah ki Deewar Hua Karte Hain

Wo Jo Sach Bolte Rehne Ki Kasam Khaate Hain
Wo Adalat Mein Gunahgaar Hua Karte Hain

Sirf Haathon Ko Na Dekho Kabhi Aakhen Bhi Padho
Kuch Sawaali Bade Khud'daar Hua Karte Hain

Wo Jo Patthar Yunhi Raste Mein Pade Rehte Hain
Unke Seene Mein Bhi Shaahkaar Hua Karte Hain

Subaah Ki Pehli Kiran Jin Ko Rula Deti Hai
Wo Sitaaron Ke Azadaar Hua Karte Hain

Jin Ki Aankhon Mein Sadaa Pyaar Ke Sehra Chamken
Dar Haqiqat Wohi Fankaar Hua Karte Hain

Sharam Aati Hai Dushman Kise Samjhen Mohsin
Dushmani Ke Bhi Kuch Mayaar Hua Karte Hain.....!
Powered by Blogger.