Weather (state,county)

Tu Is Qadar Mujhe Apne Qareeb Lagta Hai


تو اس قدر مجھے اپنے قریب لگتا ہے
تجھے الگ سے جو سوچوں عجیب لگتا ہے
جسے نہ حسن سے مطلب نہ عشق سے سروکار
وہ شخص مجھ کو بہت بدنصیب لگتا ہے
حدودِ ذات سے باہر نکل کے دیکھ زرا
نہ کوئی غیر نہ کوئی رقیب لگتا ہے
یہ دوستی یہ مراسم یہ چاہتیں یہ خلوص
کبھی کبھی یہ سب کچھ عجیب لگتا ہے
اُفق پہ دور چمکتا ہوا کوئی تارا
مجھے چراغِ دیارِ حبیب لگتا ہے
نہ جانے کب کوئی طوفان آئے گا یارو
بلند موج سے ساحل قریب لگتا ہے
Tu is qadar mujhe apne qareeb lagta hai
Tujhe alag se jo sochuun, ajeeb lagta hai

Jisay na husn se matlab na ishq se sarokaar
Vo shaksh mujh ko bahut bad-nasiib lagta hai

Hudood-e-zaat se baahar nikal ke dekh zara
Na ko’ii Ghair, na ko’ii raqeeb lagta hai

Ye dosti, ye maraasim, ye chahatein ye khuluus
Kabhii kabhii ye sab kuch ajeeb lagta hai

Ufaq pe duur chamaktaa huvaa ko’ii taara
Mujhe charaagh-e-dayaar-e-habeeb lagta hai

Na jaane kab ko’ii tuufaan aaye ga yaaron
Buland mauj se saahil qareeb lagta hai
 
Powered by Blogger.