Weather (state,county)

Tum Ne Kaisa Yeh Rabta Rakha

تم نے کیسا یہ رابطہ رکھا                              
نہ ملے ہو نہ فاصلہ رکھا                               

نہیں چاہا کسی کو تیرے سوا                            
تو نے ہم کو بھی پارسا رکھا                            

پھول کھلتے ہی کھل گئیں آنکھیں                      
کس نے خوشبو میں سانحہ رکھا                       

تو نہ رسوا ہو اس لیے ہم نے                          
اپنی چاہت پہ دائرہ رکھا                                 

جھوٹ بولا تو عمر بھر کے لیے                      
تم نے اس میں بھی ضابطہ رکھا                      

کوئی دیکھے یہ سادگی اپنی                           
پھول یادوں کا اک سجا رکھا                           

سعد الجھا رہا مگر اس نے                             
تجھ سے ملنے کا راستہ رکھا
Powered by Blogger.