Weather (state,county)

Yeh Mohjza Bhi Muhabbat Kabhi Dikhae Mujhe

یہ معجزہ بھی محبت کبھی دکھائے مجھے
کہ سنگ تجھ پہ گرے اور زخم آئے مجھے

میں اپنے پاؤں تلے روندتا ہوں سائے کو
بدن مرا سہی، دوپہر نہ بھائے مجھے

میں گھر سے تیری تمنا پہن کے جب نکلوں
برہنہ شہر میں ‌کوئی نظر نہ آئے مجھے

وہی تو سب سے زیادہ ہے نکتہ چیں میرا
جو مسکرا کے ہمیشہ گلے لگائے مجھے

وہ میرا دوست ہے سارے جہاں‌کو ہے معلوم
دغا کرے وہ کسی سے تو شرم آئے مجھے
وہ مہرباں ہے تو اقرار کیوں نہیں کرتا
وہ بد گماں ہے تو سو بار آزمائے مجھے

میں اپنی ذات میں نیلام ہورہا ہوں قتیل
غمِ حیات سے کہہ دو خرید لائے مجھے

(قتیل شفائی)

Yeh Mojeza Bhi Mohabbat Kabhi Dikhaaye Mujhe
Ke Sang Tujhpe Gire Aur Zakhm Aaye Mujhe
Main Apne Paaon Tle Rondta Hun Saye Ko
badan Mera Sahi Dopehr Na Bhaye Mujhe
Main Ghar Se Teri Tamanna Pehn K Jab Nikloon
Barhana Sheher Mein Koi Nazar Na Aye Mujhe
Whi To Sab Se Ziyada Hai Nukta Cheen Mera
 Jo Muskura K Hamesha gale Lagaye Mujhe
Wo Mera Dost Hai Saare Jahaan Ko Hai Maaloom
Daga Kare Wo Kisi Se Tho Sharm Aaye Mujhe

Wo Meharbaa Hai Tho Ikraar Kyoo Nahin Kartha
Wo Badgumaa Hai Tho Soo Baar Aazmaaye Mujhe

Main Apni Zaat Mein Neelam Ho Raha Hoon Qateel
Gham-E-Hayaat Se Keh Do Khareed Laaye Mujhe
(Qateel Shifai)
Powered by Blogger.