Weather (state,county)

Muhabbat Ki Nawazish Ho Rahi Hai


محبت میں جو رنجش ہو رہی ہے
عجب مجھ پہ نوازش ہو رہی ہے

مرے باہر ہوا کا شور ہے اور
مرے اندر بھی بارش ہو رہی ہے

میں کس کے آسماں میں اُڑ رہا ہوں
مجھے یہ کس کی خواہش ہو رہی ہے

قبا ، اہلِ سیاست میں ہے شامل
خلافِ عقل سازش ہو رہی ہے

میں ترکِ عشق کر لوں اُس سے لیکن
مگر جو خود سے پرسش ہو رہی ہے

محبت ہی مرا مسلک ہے صفدر
محبت کی نوازش ہو رہی ہے ۔
Powered by Blogger.